آصف علی زرداری ایک چٹان… تحریر و تحقیق : محمد ضرار یوسف

آج میں اپنے لیڈر کو ان کی 65 ویں سالگرہ پہ مبارکباد پیش کرتا ھوں ۔ ان کی زندگی اور سیاست اور ان کے خلاف کی جانے والی سازشوں کا معمولی سا طائرانہ جائزہ پیش کرتا ھوں ۔ پاکستان کے سابق صدر اور پاکستان پیپلز پارٹی کے صدر اور پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے کو…

تحریر: محمد بلال غوری سابق صدر آصف زرداری ایک بار پھر کڑے احتساب کی زد میں ہیں۔ان پر کئی نئے اور پرانے مقدمات چل رہے ہیں ۔توشہ خانہ ریفرنس میں آصف زرداری کو اشتہاری قرار دیا جا چکا ہے ،پارک لین ریفرنس میںچند روز قبل فرد جرم عائد ہوتے ہوتے رہ گئی۔ شنید ہے کہ…

*بھٹو کی بے نظیر بیٹی اور آمریت کے گدھ* تحریر : محمد ضرار یوسف

*بھٹو کی بے نظیر بیٹی اور آمریت کے گدھ* تحریر : محمد ضرار یوسف محترمہ بے نظیر بھٹو نے پاکستان اور عالمی پرنٹ اور الیکٹرک میڈیا میں پہلی دفعہ بھرپور توجہ 28 جون 1972 کو حاصل کی۔ جب صدر پاکستان ذوالفقار علی بھٹو 92۔اراکین پہ مشتمل ایک اعلی سطحی وفد مایوسی اور امید کی تذبذب   …

نیلام گھر کا طارق عزیز ہم سے جدا ہو گیا —تحریر سعدیہ خان

سنتی سماعتوں دیکھتی آنکھوں کو طارق عزیز کا سلام، شروع اس رب الجلال کے نام سے جس نے دونوں جہاں کو تخلیق کیا گلوں میں رنگ بھرے اور وجہ کائنات پر لاکھوں درود وسلام۔ ۔ ۔ عجیب سی کشش عجیب سی اپنائیت یہ الفاظ میں نے 1990 میں سنے تھے ہر جمعرات کو نیلام گھر…

پانچ جولائی 1977 کا یومِ سیاہ —— تحریر و تحقیق محمد ضرار یوسف

ضیاء کا عوامی حکومت پر شب خون مارنا کوئی اچانک یا عجلت میں کئے گئے فیصلے پہ عملدرآمد نہیں تھا ۔ جنرل ضیاء جس کو اپریشن فیئر پلے ( Operation Fair Play ) کا نام دیتا تھا دراصل فاؤل پلے ( Operation Foul Play) تھا۔ یہ شطرنج کے مہروں کی چال کی وہ چال تھی…

زرداری صاحب کے ’’جرائم‘‘ کی فہرست!

تاریخ جہاں دلنواز ہوتی ہے وہاں دل سوز اور دلخراش بھی۔ اقوام کی اٹھان اور تنزلی کی تاریخ دیکھ کر ان کے رویوں، حالات اور نتائج کو سمجھا اور پرکھا جاتا ہے۔اپنا المیہ یہ ہے کہ سوہنی دھرتی کی تاریخ کو مؤرخ کم ملتے ہیں اور ’’انجینئر‘‘ زیادہ۔ اس سے بھی بڑا المیہ یہ ہے…

ایک اور خیراتی کھلاڑی تیارساشا جاوید ملک ساشا جاوید ملک

عاشرے میں کسی بھی فن کی وجہ سے مقبول ستاروں کو سیاسی مقاصد کیلئے استعمال کرنے کا سلسلہ طاقتور حلقوں کی جانب سے ہمیشہ اپنایا جاتا رہا ہے۔ اس عمل کے فائدے بھی مختلف جہتوں پر مبنی ہوتے ہیں۔ ایسے افراد بالعموم سیاست، سماجیات، بشریات، معاشیات، تاریخ و فلسفے کے علم سے کوسوں دور ہوتے…