پیپلز پارٹی کے نظریے کی اساس مزدور دوستی، بنیادی انسانی حقوق اور جمہوریت ہے: سید حسن مرتضی

لاہور: پاکستان پیپلز پارٹی مزدوروں کے حقوق کے لئے جدوجہد جاری رکھے گی جب تک کہ مزدور طبقے کو مکمل آئینی حقوق نہیں مل جاتے ، 1973 کا آئین جائز اجرت ، ذاتی تحفظ اور مساوی حقوق کی ضمانت دیتا ہے۔

پیپلز پارٹی پنجاب کے پارلیمانی لیڈر سید حسن مرتضی نے نے یوم مئی پر جاری کردہ بیان میں کہا ہے کہ اپنے حقوق کی جدوجہد میں قربانیاں دینے والے محنت کشوں کو سلام پیش کرتا ہوں، پاکستان کا 1973 کا آئین محنت کشوں کی منصفانہ اُجرت، ان کی حفاظت اور یکساں حقوق کی ضمانت دیتا ہے اور پیپلز پارٹی کے نظریے کی اساس بھی مزدور دوستی اور جمہوریت ہی ہے۔ شہید ذوالفقار علی بھٹو نے اپنے دورِ حکومت کے دوران ملک میں پہلی بار مزدور پالیسی کا اجراء کیا اور ملک میں ٹریڈ یونینز کے حقوق متعارف کرائے تھے۔

پیپلز پارٹی کی حکومت نے بے نظیر ایمپلائز اسٹک آپشن اسکیم کا اجراء کیا تھا جب کہ سندھ حکومت کی جانب سے متفقہ سہہ فریقی لیبر پالیسی کا اجراء بھی اس سمت میں ایک اہم پیش رفت تھی۔ موجودہ حکومت کی ناقص اور مزدور کش پالیسیوں نے غریب مزدوروں سے دو وقت کی روٹی کا حق بھی چھین لیا ہے، کرونا بحران سے سب سے ذیادہ مزدور اور دیہاڑی دار طبقہ متاثر ہوا ہے، مگر نیازی حکومت کی اس حوالے سے کوئی پالیسی نہیں ہے۔ حکومت کی تمام پالیسیاں امرا کے مفاد میں اور مزدورمزدور ظبقے کے مخالف ہیں، حسن مرتضیٰ نے مطالبہ کیا کہ بے کرونا بحران کے دوران مزدوروں اور روزگاروں کیلے رقم 12ہزار سے بڑھا کر کم سے کم اجرت کے تحت 17500کی جائے، اور ان کی منصفانہ اور فوری تقسیم یقینی بنائی جائے۔

50% LikesVS
50% Dislikes

Leave a Reply

Please Login to comment
  Subscribe  
Notify of
%d bloggers like this: